X

فیکٹ چیک: فائرنگ کر رہی برقعہ پوش خاتون کا دہلی کا ویڈیو، فرضی دعوی کے ساتھ وائرل

وشواس نیوز نےاس ویڈیو کی پرتال کی تو ہم نے پایا کہ وائرل ویڈیو دہلی کا نومبر 2020 کا معاملہ ہے۔ معاملہ کا ویڈیو وائرل ہو نے کے بعد دہلی پولیس نے خاتون کو ہراست میں بھی لے لیا تھا۔

  • By Vishvas News
  • Updated: January 13, 2022

نئی دہلی (وشواس نیوز)۔سوشل میڈیا پر برقعہ میں نطر آرہی ایک خاتون کا ویڈیو وائرل ہو رہا ہے۔ ویڈیو میں خاتون کو رات کے اندھیرے میں سڑک پر گولیاں چلاتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔ ویڈیو کو شیئر کرتے ہوئے صارفین دعوی کر رہے ہیں کہ یہ ویڈیو کراچی کاہے۔ جب وشواس نیوز نےاس ویڈیو کی پرتال کی تو ہم نے پایا کہ وائرل ویڈیو دہلی کا نومبر 2020 کا معاملہ ہے۔ معاملہ کا ویڈیو وائرل ہو نے کے بعد دہلی پولیس نے خاتون کو ہراست میں بھی لے لیا تھا۔

کیا ہے وائرل پوسٹ میں؟

فیس بک صارف نے وائرل ویڈیو کو شیئرکرتے ہوئے لکھا، ’یہ کراچی ہےمیری جان‘۔

پوسٹ کے آرکائیو ورژن کو یہاں دیکھیں۔

پڑتال

اپنی پڑتال کو شروع کرتے ہوئےسب سے پہلے ہم نے ان ویڈ ٹول میں ویڈیو کو اپ لوڈ کیا اور کی فریمس کو گوگل رورس امیج کے ذریعہ سرچ کیا۔ سرچ میں ہمیں یہ ویڈیو 24 نومبر 2020 کو انڈیا ٹی کے آفیشیئل یوٹیوب چینل پر اپ لوڈ ہوا ملا۔ یہاں پر ویڈیو سے متعلق دی بتائی گئی معلومات کے مطابق، ’ دہلی کے جافر آباد میں ایک برقعہ پوش خاتون نے دکان کے باہر گولی باری کی‘۔

اسی معاملہ پر ہمیں آوٹ لک انڈیا کی ویب سائٹ پر بھی خبر ملی۔ 24 مومبر 2020 کو شائع ہوئی خبر کے مطابق، ’برقعہ میں ملبوس اور بندوق سے لیس ایک خاتون کی ویڈیو وائرل ہوئی ہے جو دہلی کے ایک علاقے میں گالی گلوچ اور گولیاں چلا رہی ہے۔ 28 سالہ خاتون کو ایک دکان کے باہر بدسلوکی اور بے دریغ گولیاں چلاتے ہوئے دیکھا جا رہا ہے یہاں تک کہ مقامی لوگ اور بچے سڑک پر خوف و ہراس سے دیکھتے ہیں۔ مکمل خبر یہاں پڑھ سکتے ہیں۔

اے این آئی کے ٹویٹر ہینڈل پر بھی اس معاملہ سے متعلق ٹویٹ دیکھا جا سکتا ہے۔ معلومات کے مطابق خاتون کو پولیس نے ہراست میں لے لیا ہے۔ مکمل ٹویٹ نیچے دیکھا جا سکتا ہے۔

وشواس نیوز نے تصدیق کے لئے دینک جاگرن کے شمال مشرقی دہلی کے دینک جاگرن کے صہافی اروند کمار دویری سے رابطہ کیا اور وائرل ویڈیو ان کے ساتھ شیئر کیا۔ انہوں نے ہمیں بتایا کہ، ’یہ دہلی کے جافر آباد پولیس اسٹیشن کا معاملہ ہے۔ ویڈیو میں نطر آرہی خاتون کا موبائل کے دکان دار سے متنازعہ تھا تو دھمکی دینے کے لئے گولی چلا دی تھی۔

فرضی پوسٹ کو شیئر کرنے والے فیس بک صارف کی سوشل اسکیننگ میں ہم نےپایا کہ صارف نے فیس بک ستمبر 2021 کو جوائن کیاہے اور فیس بک پر کافی سرگرم رہتا ہے۔

نتیجہ: وشواس نیوز نےاس ویڈیو کی پرتال کی تو ہم نے پایا کہ وائرل ویڈیو دہلی کا نومبر 2020 کا معاملہ ہے۔ معاملہ کا ویڈیو وائرل ہو نے کے بعد دہلی پولیس نے خاتون کو ہراست میں بھی لے لیا تھا۔

  • Claim Review : یہ کراچی ہےمیری جان
  • Claimed By : ساگر
  • Fact Check : گمراہ کن
گمراہ کن
فرضی خبروں کی نوعیت کو بتانے والے علامت
  • سچ
  • گمراہ کن
  • جھوٹ‎

مکمل حقیقت جانیں... کسی معلومات یا افواہ پر شک ہو تو ہمیں بتائیں

سب کو بتائیں، سچ جاننا آپ کا حق ہے۔ اگر آپ کو ایسے کسی بھی میسج یا افواہ پر شبہ ہے جس کا اثر معاشرے، ملک یا آپ پر ہو سکتا ہے تو ہمیں بتائیں۔ آپ نیچے دئے گئے کسی بھی ذرائع ابلاغ کے ذریعہ معلومات بھیج سکتے ہیں۔

ٹیگز

اپنی راے دیں
مزید پڑھ

No more pages to load

متعلقہ مضامین

Next pageNext pageNext page

Post saved! You can read it later