X

فیکٹ چیک: اتر پردیش انتخابات کو لےکر صحافی اجیت انجم کے نام سے وائرل ہو رہا ٹویٹ فرضی ہے

وشواس نیوز نے اپنی جانچ میں پایا کہ 2022 کے اتر پردیش انتخابات سے متعلق اجیت انجم کے نام سے وائرل ہونے والا یہ ٹویٹ فرضی ہے۔

  • By Vishvas News
  • Updated: February 6, 2022

نئی دہلی (وشواس نیوز)۔ اتر پردیش انتخابات سے متعلق ہر طرح کی فرضی اور گمراہ کن خبریں سوشل میڈیا پر وائرل ہیں۔ اسی ضمن میں صحافی اجیت انجم کا ایک جعلی ٹویٹ شیئر کیا جا رہا ہے، جس میں لکھا ہے کہ اگر اتر پردیش میں دوبارہ یوگی کی حکومت بنتی ہے تو وہ صحافت چھوڑ دیں گے۔ وشواس نیوز نے اپنی جانچ میں پایا کہ یہ ٹویٹ فرضی ہے۔ اجیت انجم نے بھی وشواس نیوز سے بات کرتے ہوئے اسے فرضی ہونے کی تصدیق کی ہے۔

کیا ہے وائرل پوسٹ میں؟

فیس بک صارف نے وائرل ٹویٹ شیئر کیا، جس میں لکھا تھا، ‘اگر یوگی 2022 کے انتخابات میں اتر پردیش میں دوبارہ جیت گئے تو میں صحافت چھوڑ دوں گا اور دہلی کے بلیمران میں چکن پکوڑے کی دکان کھولوں گا‘۔

فیس بک پوسٹ کا مواد ویسا ہی ہے جیسا کہ یہاں لکھا گیا ہے۔ اس کا محفوظ شدہ ورژن یہاں دیکھیں۔ بہت سے دوسرے صارفین نے اس اسکرین شاٹ کو شیئر کیا ہے۔

پوسٹ کا آرکائیو ورژن یہاں دیکھیں۔

پڑتال

اپنی تحقیقات شروع کرنے کے لیے، ہم نے پہلے ٹویٹ کو قریب سے دیکھا۔ ہم نے ٹویٹ میں بلیو ٹک دیکھا، جب کہ صحافی اجیت انجم کے آفیشل ہینڈل پر بلیو ٹک نہیں ہے۔

تحقیقات کو مزید آگے بڑھاتے ہوئے، ہم کے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر پہنچے اور وہاں وائرل ٹویٹ پایا۔ تلاش میں، ہمیں 5 فروری 2022 کو اسی ٹویٹ کے بارے میں ایک ٹویٹ ملا، جس میں وائرل ٹویٹ کا اسکرین شاٹ شیئر کرتےہوئے لکھا گیا ہے ‘میرے بارے میں پروپیگنڈے کا نیا فوٹو شاپ’۔ میرے نام پر کچھ بھی لکھا ہوا وائرل ہو رہا ہے۔ اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ بھکتوں کی جماعت مجھ پر کتنی ناراض ہے۔ میرا ٹویٹر ہینڈل ویری فائلڈ نہیں ہے لیکن بلیو ٹک فوٹوشاپ کرکے گیم آن ہے۔ یہ جعلی لوگ ہیں۔

ہمیں اجیت انجم کے تصدیق شدہ فیس بک ہینڈل پر جعلی وائرل ٹویٹ سے متعلق تردید بھی ملی۔ پوسٹ کو نیچے دیکھا جا سکتا ہے۔

وشواس نیوز بھی اجیت انجم سے وائرل ٹویٹ سے متعلق معلومات حاصل کرنا چاہتا تھا۔ انہوں نے ہمیں تصدیق کی کہ ٹویٹ جعلی تھا۔ پچھلے کچھ دنوں سے ان کے نام سے کچھ جعلی ٹویٹس کے اسکرین شاٹس وائرل ہو رہے ہیں اور یہ ان میں سے ایک ہے۔

جعلی پوسٹ شیئر کرنے والے فیس بک صارف کی سوشل اسکیننگ میں ہمیں معلوم ہوا کہ صارف ایم تیواری دیوریا کا رہنے والا ہے اور 240 لوگ اس صارف کو فالو کرتے ہیں۔

نتیجہ: وشواس نیوز نے اپنی جانچ میں پایا کہ 2022 کے اتر پردیش انتخابات سے متعلق اجیت انجم کے نام سے وائرل ہونے والا یہ ٹویٹ فرضی ہے۔

  • Claim Review : اگر یوگی 2022 کے انتخابات میں اتر پردیش میں دوبارہ جیت گئے تو میں صحافت چھوڑ دوں گا اور دہلی کے بلیمران میں چکن پکوڑے کی دکان کھولوں گا
  • Claimed By : ایم تیواری
  • Fact Check : جھوٹ‎
جھوٹ‎
فرضی خبروں کی نوعیت کو بتانے والے علامت
  • سچ
  • گمراہ کن
  • جھوٹ‎

مکمل حقیقت جانیں... کسی معلومات یا افواہ پر شک ہو تو ہمیں بتائیں

سب کو بتائیں، سچ جاننا آپ کا حق ہے۔ اگر آپ کو ایسے کسی بھی میسج یا افواہ پر شبہ ہے جس کا اثر معاشرے، ملک یا آپ پر ہو سکتا ہے تو ہمیں بتائیں۔ آپ نیچے دئے گئے کسی بھی ذرائع ابلاغ کے ذریعہ معلومات بھیج سکتے ہیں۔

ٹیگز

اپنی راے دیں

No more pages to load

متعلقہ مضامین

Next pageNext pageNext page

Post saved! You can read it later